میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات کی ڈیٹ شیٹ جاری

پنجاب ہائر ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ نے میٹرک اور انٹرمیڈیٹ کے امتحانات کے لیے تاریخ کا اعلان کردیا ہے

پنجاب ہائر ایجوکیشن نے نوٹیفکیشن جاری کیا کہ صوبہ کے تمام بورڈز کے انٹرمیڈیٹ امتحانات 26 جون سے شروع ہوں گے۔ اورنویں اور گیارہویں کے امتحانات ستمبر میں شروع ہونگے۔

بتایا گیا ہے کہ میٹرک کی کلاسوں کے لیے امتحانات 14 جولائی سے شروع ہوں گے بتایا جارہا ہے کہ دو دن میں بارہویں اور میٹرک کی ڈیٹ شیٹ جاری کردی جائے گی

اسی طرح نویں کلاس کے امتحانات کے نتائج 29 اکتوبر کو سامنے آئیں گے اور فرسٹ ایئر کے امتحانات کے نتائج کا اعلان 14 نومبر کو کیا جائے گا

اس سے قبل چیرمین پنجاب بورڈ کمیٹی نے میٹرک کے امتحانات 17 جون سے اور 9 ویں کے امتحانات 27 جولائی کو لینےکا اعلان کیا تھا

خیال رہے کہ شفقت محمود نے بتایا تھا کہ 20 جون کے بعد پورے ملک میں بورڈ کے امتحانات کووڈ کے ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کے ساتھ “ہر قیمت پر” منعقد کروائے جائیں گے

انہوں نے بتایا کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ طالب علم کو بغیر امتحانات پروموٹ نہیں کیا جائے گا وزیر تعلیم شفقت محمود کی صدارت میں وزرائے تعلیم کا اجلاس ہوا

امتحانات کے بغیر طلبا کی اگلی کلاس میں ترقی نہیں ہوگی۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہا، کلاس 9 اور 11 کے امتحانات متعلقہ بورڈ کے ٹائم ٹیبل کے مطابق ہوں گے۔ ان افواہوں میں کوئی صداقت نہیں کہ امتحانات کا انعقاد نہیں کیا جائے گا

حکومت کا 7 جون سے تعلیمی ادارے کھولنے کا فیصلہ

حکومت نے 7 جون سے سکول کھولنے کا فیصلہ کردیا ہے صوبائی وزیر تعلیم مراد راس نے ٹویٹ کیا کہ 7 جون کو تعلیمی ادارے کھول دئیے جائیں گے

انہوں نے بتایا کہ لاہور سمیت ملک بھر میں تعلیمی ادارے کھول دئیے جائیں گے مراد راس نے اس بات کا اعلان اپنی ٹوئیٹ میں کیا کہ تعلیمی ادارے کھولنے کے حوالے سے این سی اوسی میں مشاورت کی گئی جس کے بعد فیصلہ کیاگیا کہ 7 جون سے تمام ادارے کھول دئیے جائیں گے یہ بھی کہا گیا کہ گورنمنٹ ایس او پیز پر عملدرآمد کرائے

خیال رہے 24 مئی کو ہونے والے اجلاس میں امتحان لینے کی اجازت دی گئی تھی شفقت محمود نے بتایا تھا کہ 20 جون کے بعد پورے ملک میں بورڈ کے امتحانات کووڈ کے ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کے ساتھ “ہر قیمت پر” منعقد کروائے جائیں گے

محکمہ اسکول ایجوکیشن پنجاب نے تعطیلات 1 ماہ کرنے کی تجویز بھی دی ہے۔

تجویز کے مطابق اگلے ماہ جون میں طلبہ کے لیے تعلیمی ادارے کھولے جائیں گے اور سالانہ امتحانات منعقد کیے جائیں۔بتایا گیا ہے کہ اگست سے نئے سیشن کا آغاز کیا جائے گا

موسم گرما کی چھٹیوں کے حوالے سے خبر آگئی

موسم گرما کی چھٹیوں کے حوالے سے خبر آگئی ہے محکمہ اسکول ایجوکیشن پنجاب نے تعطیلات 1 ماہ کرنے کی تجویز دی ہے۔

تجویز کے مطابق اگلے ماہ جون میں طلبہ کے لیے تعلیمی ادارے کھولے جائیں گے اور سالانہ امتحانات منعقد کیے جائیں۔

بتایا گیا ہے کہ اگست سے نئے سیشن کا آغاز کیا جائے گا اس سلسلے میں حتمی فیصلہ بین الصوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس میں ہوگا۔

واضح رہےکہ مراد راس نے اپنی ٹوئیٹ میں بتایا ہے کہ سات جون سے تعلیمی ادارے کھول دئیے جائیں گے

این سی او سی نے کرونا کے 5 فیصد سے کم والے علاقوں میں تعلیمی ادارے کھولنے کی اجازت دی ہے جبکہ 5 فیصد سے زائد کیسز رکھنے والے علاقوں کے حوالے سے فیصلہ 3 جون کو کیا جائے گا۔

اس وقت پنجاب کے جن اضلاع ميں اسکول بند ہیں ان میں لاہور، راول پنڈی، فيصل آباد، سرگودھا، گوجرانوالہ، گجرات شامل ہیں۔

خیال رہے کہ 24 گھنٹوں میں 2 ہزار 724 نئے کرونا کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ ملک میں کرونا وائرس کے مثبت کیسز کی شرح 4.61 فیصد ہوگئ پاکستان میں کرونا سے مجموعی اموات کی تعداد 20 ہزار 465 ہوگئی ہے۔

واضح رہے کہ شفقت محمود نے بتایا کہ 20 جون کے بعد پورے ملک میں بورڈ کے امتحانات کووڈ کے ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کے ساتھ “ہر قیمت پر” منعقد کروائے جائیں

بورڈ کے امتحانات 20جون کے بعدشروع ہوں گے

شفقت محمود نے بتایا کہ 20 جون کے بعد پورے ملک میں بورڈ کے امتحانات کووڈ کے ایس او پیز پر سختی سے عمل درآمد کے ساتھ “ہر قیمت پر” منعقد کروائے جائیں

حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ طالب علم کو بغیر امتحانات پروموٹ نہیں کیا جائے گا وزیر تعلیم شفقت محمود کی صدارت میں وزرائے تعلیم کا اجلاس ہوا

امتحانات کے بغیر طلبا کی اگلی کلاس میں ترقی نہیں ہوگی۔ انہوں نے ایک ٹویٹ میں کہا، کلاس 9 اور 11 کے امتحانات متعلقہ بورڈ کے ٹائم ٹیبل کے مطابق ہوں گے۔ ان افواہوں میں کوئی صداقت نہیں کہ امتحانات کا انعقاد نہیں کیا جائے گا

اجلاس میں فیصلہ کیاگیا کہ ہرصورت میں امتحانات لیے جائیں گے یہ بھی بتایا گیا ہے کہ امتحانات دوسرے یا تیسرے ہفتے میں لیے جائیں گے فیصلے کے مطابق رزلٹ لیٹ ہواتھا تو جامعات میں پروویژنل سرٹیفیکیٹ کی بنیاد پر داخلہ ملے گا موسم گرما کی چھٹیوں کا فیصلہ صوبے کریں گے البتہ چھٹیاں محدود ہوں گی اجلاس میں اساتذہ اور نگران عملے کی ویکسینیشن یقینی بنانے پر زور بھی دیاگیا ہے

خیال رہے کہ گزشتہ روز این سی او سی نے امتحانی ادارے کھولنے کی اجازت دےدی ہے ان علاقوں میں سکول نہیں کھولیں گے جہاں کرونا کیسز کی شرح 5 فیصد ہے اس کے علاوہ کورونا وائرس کے باعث سندھ میں تعلیمی ادارے بند کرنے کا اعلان کیا گیا ہے یہ اعلان سندھ کے وزیر تعلیم سعید غنی کی جانب سے کیا گیا

اعلان کیا گیا ہے کہ تعلیمی اداروں میں اساتذہ 50 فیصد آئیں گے انہوں نے یہ بھی کہا کہ آن لائن کلاسز کا عمل جاری رکھا جائے گا۔

یونیورسٹی آف سوات کے وائس چانسلر کو عہدے فارغ کردیا گیا

ذائقہ کے مطابق یونیورسٹی آف سوات کے وائس چانسلر کو گورنر خیبر پختونخوا کی جانب سے عہدے سے فارغ کردیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنر کے پی کے کی جانب سے یونیورسٹی آف سوات کے وائس چانسلر کو مالی بے قاعدگیوں، اختیارات کے غیر قانونی استعمالات اور غیر قانونی بھرتیوں کے الزامات پر عہدے سے فارغ کردیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق محکمہ ہائر ایجوکیشن کی جانب سے اعلامیہ کیا گیا ہے کہ گورنر خیبر پختونخوا جو کہ چانسلر کے عہدے پر بھی فائز ہیں۔ ان کی جانب سے یونیورسٹی آف سوات کے وائس چانسلر کو عہدے سے فارغ کردیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق نیورسٹی اور سوات کے وائس چانسلر ڈاکٹر جمال خان کو ان کے عہدے سے ہٹانے کی وجوہات غیر قانونی بھرتیاں، اپنے اختیارات کا غلط استعمال اور مالی بے قاعدگیوں بتائی جا رہی ہیں۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ گورنر کے پی کے شاہ فرمان کی جانب سے صوبائی اور گورنر کمیٹی کی جانب سے پیش کردہ رپورٹ پر وائس چانسلر آف یونیورسٹی آف سوات اور 90 دن کی جبری رخصت پر بھیج دیا گیا ہے۔ ان کی جگہ لائیو سائنسز کے ڈین ڈاکٹر حسن شیر کو پرو وائس چانسلر آف یونیورسٹی آف سوات مقرر کردیا گیا ہے۔ ڈاکٹر حسن شیر کو دو سال کے دورانیہ کے لیے پرووائس چانسلر آف یونیورسٹی آف سوات مقرر کیا گیا ہے۔

دسویں اور بارہویں کے امتحانات جون میں ہوں گے، شفقت محمود

حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ طالب علم کو بغیر امتحانات پروموٹ نہیں کیا جائے گا وزیر تعلیم شفقت محمود کی صدارت میں وزرائے تعلیم کا اجلاس ہوا

اجلاس میں فیصلہ کیاگیا کہ ہرصورت میں امتحانات لیے جائیں گے یہ بھی بتایا گیا ہے کہ امتحانات دوسرے یا تیسرے ہفتے میں لیے جائیں گے فیصلے کے مطابق رزلٹ لیٹ ہواتھا تو جامعات میں پروویژنل سرٹیفیکیٹ کی بنیاد پر داخلہ ملے گا موسم گرما کی چھٹیوں کا فیصلہ صوبے کریں گے البتہ چھٹیاں محدود ہوں گی اجلاس میں اساتذہ اور نگران عملے کی ویکسینیشن یقینی بنانے پر زور بھی دیاگیا ہے

خیال رہے کہ گزشتہ روز این سی او سی نے امتحانی ادارے کھولنے کی اجازت دےدی ہے ان علاقوں میں سکول نہیں کھولیں گے جہاں کرونا کیسز کی شرح 5 فیصد ہے اس کے علاوہ کورونا وائرس کے باعث سندھ میں تعلیمی ادارے بند کرنے کا اعلان کیا گیا ہے یہ اعلان سندھ کے وزیر تعلیم سعید غنی کی جانب سے کیا گیا

اعلان کیا گیا ہے کہ تعلیمی اداروں میں اساتذہ 50 فیصد آئیں گے انہوں نے یہ بھی کہا کہ آن لائن کلاسز کا عمل جاری رکھا جائے گا۔

حکومت کا تمام نجی و سرکاری تعلیمی ادارے بند کرنے کا حکم

حکومت نےتمام نجی و سرکاری تعلیمی ادارے بند کرنے کا حکم دے دیا

تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کے باعث سندھ میں تعلیمی ادارے بند کرنے کا اعلان کیا گیا ہے یہ اعلان سندھ کے وزیر تعلیم سعید غنی کی جانب سے کیا گیا

اعلان کیا گیا ہے کہ تعلیمی اداروں میں اساتذہ 50 فیصد آئیں گے انہوں نے یہ بھی کہا کہ آن لائن کلاسز کا عمل جاری رکھا جائے گا۔

انہوں نے ہدایات دی ہیں کہ آن لائن کلاسز کے ساتھ ہوم ورک کے لیے ای میل اور واٹس ایپ سے تعلیمی عمل جاری رکھا جائے۔

اس کے ساتھ ہی حکومت نے ٹیچرز کی فوری ویکسی نیشن کا فیصلہ کیا ہے، این سی اوسی نے کی یہ فیصلہ کیا، سات جون تک اساتذہ کی ویسی نیشن مکمل کرنے کا حکم دیا گیا اسی طرح بورڈ امتحانات سے قبل نگران عملے کی ویکسی نیشن لازمی قرار دی گئی ہے۔

صوبوں کو اعلامیے جاری کیے گئیے کہ 5جون سے قبل ویکسی نیشن مکمل کی جائے تاکہ 7جون سے سکولوں کو کھولاجاسکے۔

 پاکستانی کورونا ویکسین سے متعلق اہم خبر سامنے آگئ پاکستان میں تیار ہونے والی سنگل ڈوز کورونا ویکیسن آئندہ ہفتے عوام کو لگائی جاۓ گی

واضح رہے این سی او سی نے سیاحتی مقامات کھولنے کی اجازت دے دی ہے بندشوں میں بھی نرمی کردی گئی ہے

ملک بھر میں اب تک ایک کروڑ 27 لاکھ 17 ہزار 235 افراد کے ٹیسٹ کئے گئے اب تک 8 لاکھ 13 ہزار 855 مریض صحتیاب ہوچکے ہیں جبکہ 4 ہزار 412 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے۔جاں بحق ہونے والوں کی تعداد 20 ہزار کے قریب ہے

محکمہ تعلیم بلوچستان کی جانب سے بھی تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کر دیا گیا

ذرائع کے مطابق پاکستان کے صوبہ بلوچستان کہ محکمہ تعلیم کی جانب سے سوائے کوئٹہ کے صوبہ بھر میں تعلیمی ادارے کھولنے کا اعلان کر دیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سیکرٹری تعلیم بلوچستان کی جانب سے تعلیمی ادارے کھولنے کے متعلق ایک نوٹیفکیشن جاری کیا گیا ہے۔ اس نوٹیفیکیشن میں لکھا گیا ہے کہ صوبہ بلوچستان بھر میں تعلیمی ادارے 24 میں سے کھول دیئے جائیں گے۔ تاہم صوبہ بلوچستان کے دارالحکومت کوئٹہ میں تعلیمی ادارے نہیں کھولے جائیں گے۔

ذرائع کے مطابق جاری کردہ نوٹیفکیشن میں سیکرٹری تعلیم کی جانب سے لکھا گیا ہے کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) کی جانب سے جاری کردہ ہدایات پر عمل کرتے ہوئے کوئٹہ میں تمام تر تعلیمی ادارے فلحال بند رہیں گے۔

ذرائع کی جانب سے کہا گیا ہے کہ سیکرٹری تعلیم بلوچستان کی جانب سے نوٹیفیکیشن میں لکھا گیا ہے کہ تمام تعلیمی ادارے کھولنے کے ساتھ ساتھ این سی او سی کی جانب سے جاری کردہ کرونا ایس او پیز پر یقینی طور پر عمل درآمد کروایا جائے گا۔

ذرائع کے مطابق نجی ٹی وی چینل سے گفتگو کرتے ہوئے سیکرٹری تعلیم بلوچستان شیر خان باز آئی کی جانب سے کہا گیا ہے کہ این سی او سی کی جانب سے جاری کردہ ہدایات کو سامنے رکھتے ہوئے کرونا وائرس کی شرح 5 فیصد کی شرح سے کم علاقوں میں سکول کھولے جا رہے ہیں جبکہ کوئٹہ میں کرونا وائرس کی شرح آٹھ فیصد ہے جس کی وجہ سے کوئٹہ میں تعلیمی ادارے بند رہیں گے تاہم کوئٹہ میں تعلیمی ادارے کھولنے کے متعلق بھی فیصلہ جلد کیا جائے گا۔

واضح رہے کہ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی جانب سے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر تعلیمی اداروں کے کھولنے کے متعلق اعلان کیا گیا تھا جب کے صوبہ پنجاب میں تعلیمی ادارے کھولنے کے متعلق صوبہ پنجاب کے وزیر تعلیم مراد راس کی جانب سے ٹویٹ کیا گیا تھا کہ پہلے مرحلے میں 16 اضلاع کے اندر تعلیمی اداروں کو کھولا جائے گا۔ ‏ان 16 اضلاع میں کرونا وائرس کی شرح 5 فیصد سے کم ہے۔

کورونا کے باعث سالانہ امتحانات ملتوی کر دئیے گئے ہیں

کورونا کے باعث سالانہ امتحانات ملتوی کر دئیے گئے ہیں

بلوچستان نےکورونا کی تیسری لہر کے باعث ایف اے ایف ایس سی کے سالانہ امتحانات ملتوی کر دئے ہیں

تفصیلات کے مطابق کوئٹہ نے طلباء کی صحت کے خیال کی وجہ سے امتحانات ملتوی کیے ہیں اس حوالے سے بلوچستان بورڈ آف انٹرمیڈیٹ نے نوٹیفیکیشن بھی جاری کیا

ذرائع کے مطابق امتحانات 25 مئی کو شروع ہونا تھے لیکن تیسری لہر کی تباہ کاریوں کی وجہ سے ملتوی کر دئیے گئے گزشتہ ہفتے بلوچستان نے تعلیمی اداروں کی بندش میں بھی اضافہ کیا

پاکستان میں کورونا کی صورتحال

پاکستان میں اب تک کل 1 کروڑ 25 لاکھ 10 ہزار کووڈ ٹیسٹ کیے جا چکے ہیں مجموعی مریضوں کی تعداد 8 لاکھ 82 ہزار ہو چکی ہے کرونا وائرس سے صحت یاب مریضوں کی تعداد 7 لاکھ 95 ہزار 511 ہو چکی ہے ملک میں اب تک کورونا کے باعث انتقال کرنے والوں کی تعداد 19 ہزار 752 ہو گئی اور صحت یاب ہونے والوں کی تعداد 7 لاکھ 95 ہزار 511 ہو چکی ہے

اسکولوں کے دوبارہ کھلنے کا انحصار وائرس میں کمی پر ہے، مراد راس

سوشل میڈیا ویب سائٹ ٹوئٹر پر بات کرتے ہوئے ڈاکٹر مراد راس کا کہنا ہے کہ اسکولوں کے دوبارہ کھلنے کا انحصار وائرس میں کمی پر ہے ملک میں انفیکشن کی شرح کم ہوگی تب ہی اسکول کھولے جاسکتے ہیں

انکا کہنا تھا کہ ایس او پیز پر عمل کر کے اور ویکسین کے ذریعے ہی وائرس سے بچا جاسکتا ہے۔
ان 2 چیزوں کو کرنے سے ہم بہت جلد اپنے معمولات پر واپس آسکتے ہیں۔ ہم انشاء اللہ مل کر ایسا کر سکتے ہیں۔

اس بارے میں تفصیل سے بات کرتے ہوۓ انہوں نے کہا کہ کورونا کی سطح کو ایس او پیز پر عمل کے ذریعے کم کیا جاسکتا ہے۔ اور دوسرا طریقہ 40 سال سے زائد عمر کے شہریوں کو ویکسین لگانا ہے، جس پر احسن طریقے سے عمل کیا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ امتحانات کی منسوخی کی خبریں سوشل میڈیا پر گردش کرررہی تھیں جسے آج شفقت محمود نے مسترد کردیااور کہا کہ اس میں کوئی حقیقت نہیں ہے۔

خیال رہے کہ اس سے قبل پنجاب حکومت نے صوبے میں کورونا وائرس کے کیسز بڑھنے کے نتیجے میں صوبے کے تمام تعلیمی اداروں کو بند رکھنے کا اعلان کیا تھا۔ نوٹیفکیشن کے تحت تعلیمی ادارے 29 اپریل سے عید کی تعطیلات تک بند رہیں گے